مری میں اموات انتظامی نااہلی اور مجرمانہ غفلت کا دردناک واقعہ ہےِ، شہباز شریف

0
26

لاہور: مسلم لیگ (ن) کے صدر اور اپوزیشن لیڈر شہبازشریف کا کہنا ہے کہ مری میں اموات انتظامی نااہلی اور مجرمانہ غفلت کا دردناک واقعہ ہےِ۔ 

ایکسپریس نیوز کے مطابق مری میں شدید سردی میں ٹھٹھر کر سیاحوں کی اموات پر اظہار افسوس کرتے ہوئے مسلم لیگ (ن) کے صدر اور قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر شہبازشریف کا کہنا تھا کہ مری اور گلیات میں ٹریفک رش میں پھنسی گاڑیوں میں شہریوں کی امواتاموات انتظامی نااہلی اور مجرمانہ غفلت کا دردناک واقعہ ہےِ، جب حکومت کو پتہ تھا کہ شہری اس قیامت خیز سردی میں پھنسے ہوئے ہیں تو انہیں بچانے اور محفوظ مقامات تک پہنچانے کی کوشش کیوں نہ ہوئی۔قائد حزب اختلاف کا کہنا تھا کہ یہ اس حکومت کی انتظامی صلاحیت کا عالم ہے کہ مری اور گلیات میں ٹریفک انتظامات کرنے کے قابل بھی نہیں، اگر حکومت ایک ہزار گاڑیوں کے انتظام کی بھی صلاحیت نہیں رکھتی تو پھر اسے اقتدار میں رہنے کا کیا اور کیوں حق ہے، اگر سیاح اتنی بڑی تعداد میں جا رہے تھے تو حکومت کو کیوں پتہ نہ چلا، انتظامیہ کہاں سوئی ہوئی تھی، پیشگی انتظامات کیوں نہ کئے گئے۔شہبازشریف نے کہا کہ جو حکومت رش میں پھنسے اپنے شہریوں کو نہیں بچاسکتی وہ مہنگائی کی دلدل سے عوام کو کیسے نکال سکتی ہے، جو حکومت ایک ہزار گاڑیوں کا مسئلہ حل نہیں کرسکتی وہ ملک کے بڑے اور سنگین مسائل سے کیونکر نمٹ سکتی ہے، عمران نیازی میں تو اخلاقی جرات نہیں، کم ازکم اس سنگین مجرمانہ غفلت کے ذمہ داروزیراور ماتحتوں کو ہی برخاست کردیا جائے، اس خون ناحق پر کسی کو تو ذمہ دار ٹھہرایا جائے۔اپوزیشن لیڈر کا کہنا تھا کہ عوام کے خون پر حکومتی مجرمانہ خاموشی بدترازگناہ کے مترادف ہے، یہ وفات نہیں شہریوں کے قتل عمد کے مترادف ہے،   سیاحت میں اضافے کاحکومتی پراپگنڈہ سفاکی اور سنگ دلی کی انتہاء ہے، مغرب کی مثالیں دینے والوں نے تو مشرقی روایات کی بھی لاج نہیں رکھی۔ میں متاثرہ خاندانوں سے دلی ہمدردی اور تعزیت کرتا ہوں، ان کے غم میں شریک ہیں، اللہ تعالی مرحومین کو جوار رحمت میں جگہ اور پسماندگان کو صبر جمیل دے۔واضح رہے کہ مری میں شدید برفباری اور ٹریفک کے جام ہونے کے  باعث سیاح شدید مشکلات سے دوچار ہیں، اور سردی کی شدت میں ٹھٹھر کر جاں بحق ہونے والے افراد کی تعداد 19  ہوچکی ہے، جب کہ پنجاب حکومت نے مری کو آفت زدہ قرار دیتے ہوئے ایمرجنسی نافذ کردی ہے۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here