تبدیلی سرکار نے قانون سازی کے نام پر ڈرامہ کھیلا‘خالد اعوان

0
288

غلط تاثر دینے کی کوشش کی گئی کہ صرف پی ٹی آئی ہی اوورسیز کا دکھ درد سمجھتی ہے
سپیکر نے اپوزیشن کو اعتماد میں نہ لیکر نہ صرف وعدہ خلافی کی بلکہ عزت کو پامال کیا
نیویارک (نمائندہ خصوصی):____ پاکستان پیپلزپارٹی امریکہ کے صدر محمد خالد اعوان نے موجودہ نام نہاد تبدیلی سرکار کی جانب سے پارلیمنٹ کو مجروح اور اس کی اہمیت کی توہین کرنے والی قانون سازی کو تحت غیر جمہوری اختیار کا استعمال کرنے پر شدید الفاظ میں مذمت کی ہے-پی پی پی صدر نے اس پر بات کرتے ہوئے کہا کہ یہ ایک ڈرامہ کھیلا ہے اور اس میں یہ تاثر دینے کی کوشش کی گئی کہ صرف تحریک انصاف ہی سمندر پار پاکستانیوں کے دکھ درد کو سمجھتی ہے اور دیار غیر میں رہنے والے پاکستانیوں کے حق رائے دہی کی جنگ صرف پی ٹی آئی لڑ رہی ہے جوکہ بالکل درست نہیں اور حقیقت اس کے برعکس ہے-انہوں نے کہا کہ سمندر پار پاکستانیوں کے ووٹ کے حق کا بل پارلیمنٹ کے گزشتہ مشترکہ اجلاس میں 33بلوں کی آخری لائن پر تھا حکومت صرف سمندر پار پاکستانیوں کے ووٹ کے حقوق کے نام پر اپنی پسند کی قانون سازی کو بلڈوز کرنا چاہتی ہے- خالد اعوان نے مزید کہا کہ پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے واضح طور پر اپنا موقف پیش کیا ہے کہ سمندر پار پاکستانیوں کے ووٹ کے حق پر قانون سازی کیلئے حکومت کو اپوزیشن کو مکمل طور پر اعتماد میں لیا جائے اور تمام اپوزیشن کی مشاورت حاصل کی جائے اور اس قانون میں پارلیمنٹ میں بحث ومباحثہ کر کے اس بل کو پاس کر کے قانون بنائے جائے جو کہ آئین کا مضبوط حصہ بن سکے-پارٹی صدر خالد اعوان نے مزید کہا کہ اسی طرح سپیکر قومی اسمبلی نے وعدہ خلافی کرتے ہوئے اپوزیشن کو اعتماد میں نہ لیا اور نہ صرف وعدہ خلافی کی بلکہ سپیکر کی عزت اور احترام کو بھی پامال کیا

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here