نااہلی کیس؛ فیصل واوڈا کی الیکشن کمیشن کی سماعت رکوانے کی درخواست مسترد

0
43
FEDERAL MINISTER FOR WATER RESOURCES, MUHAMMAD FAISAL VAWDA ADDRESSING A PRESS CONFERENCE IN ISLAMABAD ON OCTOBER 22, 2018.

اسلام آباد ہائی کورٹ نے فیصل واوڈا کی اپنے خلاف الیکشن کمیشن میں نااہلی کیس کی سماعت رکوانے کی درخواست خارج کردی۔

اسلام آباد ہائی کورٹ کے چیف جسٹس اطہر من اللہ نے درخواست کی سماعت کی۔ فیصل واوڈا نے الیکشن کمیشن کا 12 اکتوبر کا فیصلہ چیلنج کرتے ہوئے سماعت رکوانے کی درخواست کی۔چیف جسٹس اطہر من اللہ نے فیصل واوڈا کے وکیل سے کہا کہ آپ کو کیا ڈر ہے الیکشن کمیشن کو فیصلہ کرنے دیں۔ وکیل نے بتایا کہ یہ کیس سینیٹ الیکشن سے متعلق ہے، الیکشن کمیشن کامیابی کے 60 روز میں اہلیت کا فیصلہ کرسکتا ہے، الیکشن کمیشن کی کارروائی روک کر فیصل واوڈا کیخلاف فیصلہ غیر قانونی قرار دیا جائے۔چیف جسٹس اطہر من اللہ نے ریمارکس دیے کہ 60 روز کی مدت میں فیصل واوڈا کیخلاف درخواست آچکی تھی، آپ اپنے بےگناہی ثابت کریں، اگر آپ کے ہاتھ صاف ہیں تو الیکشن کمیشن کو قانون کے مطابق کارروائی کرنے دیں، آپ کو الیکشن کمیشن کی کارروائی سےکیاڈر ہے؟۔عدالت نے درخواست ناقابل سماعت قرار دے کر مسترد کردی۔ ہائیکورٹ نے الیکشن کمیشن کو فیصل واوڈا نااہلی کیس کا 60 دن میں فیصلہ کرنے کی ہدایت کردی۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here