جاپانی سفیر کی طالبان کے اعلیٰ رکن سے ملاقات

0
55

ٹوکیو:___ افغانستان کیلئے جاپان کے سفیر نے طالبان کے ایک اعلیٰ رُکن سے کہا ہے کہ افغانستان سے جاپانی شہریوں کے فوری اور محفوظ انخلاء کو یقینی بنانے میں مدد فراہم کی جائے۔ یہ جاپانی حکومت اور اسلامی گروپ طالبان کے کسی اعلیٰ رُکن کے مابین پہلی باضابطہ ملاقات تھی۔جاپانی سفیر اوکادا تاکاشی نے طالبان کی عبوری حکومت کے قائم مقام وزیر خارجہ امیر خان متقی سے بدھ کے روز قطر کے دارالحکومت دوحہ میں مذاکرات کیے ہیں۔جناب اوکادا نے اس امر کو یقینی بنانے میں تعاون کی درخواست کی کہ افغانستان میں جاپانی شہری اور جو افغان باشندے جاپان کے سفارتخانے میں کام کرتے تھے، وہ بھی افغانستان میں محفوظ ہوں۔ انہوں نے کہا کہ جو لوگ ملک چھوڑنے کے خواہشمند ہیں انہیں ایسا کرنے کی اجازت دی جائے۔جاپانی سفیر نے اُن لوگوں کے محفوظ سفر کیلئے بھی تعاون طلب کیا جو جاپان سے انسانی امداد مہیا کریں گے۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ عبوری حکومت خواتین اور نسلی اقلیتوں کے حقوق کا احترام کرے اور تمام ممکنہ فریقوں پر مشتمل سیاسی ڈھانچہ تخلیق کرے جس میں متنوع نسلی اور مذہبی گروپ شامل ہوں۔جاپان کی وزارت خارجہ کا کہنا ہے کہ جناب متقی نے جناب اوکادا کی درخواستیں قبول کرنے کے ارادے کا اظہار کیا ہے۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here