کالعدم تحریک لبیک کا مارچ اسلام آباد کی طرف روانہ”جھڑپوں میں ایک اور پولیس اہلکار شہید

0
39

راولپنڈی: کالعدم تحریک لبیک کا مارچ مریدکے میں تین روزقیام کے بعد اسلام آباد کی طرف روانہ ہوگیاہے۔ مارچ میں ہزاروں کارکنان شریک ہیں جبکہ مریدکے سے آگے پولیس کی بھاری نفری بھی موجود ہے۔

سادھوکی کے قریب مظاہرین اور پولیس کے درمیان جھڑپوں میں اے ایس آئی محمد اکبر جاں بحق اور دو ڈی ایس پی اور پانچ انسپکٹرز سمیت 45 پولیس اہلکار زخمی ہوگئے۔ محمد اکبر کا تعلق قصور سے تھا۔مارچ روکنے کےلیے اسلام آبادکی طرف جانیوالی جی ٹی روڈپر متعددمقامات پرکینٹینرزلگائے گئے ہیں۔ دریائے چناب سے پہلے سڑک پرخندقیں بنادی گئی ہیں۔راولپنڈی پولیس نے مری روڈ کو ہر طرح کی ٹریفک کے لیے مکمل طور پر بند کر دیا ہے۔ اہم شاہراہیں سیل ہونے سے معمولات زندگی متاثر ہونے لگے اور شہریوں کو شدید مشکلات کا سامنا ہے۔ مری روڈ اور ملحقہ شاہراہوں کے تمام تعلیمی ادارے و تمام کاروباری مراکز بند کردیے گئے۔ مری روڈ پر پبلک ٹرانسپورٹ، بینک اور دفاتر بھی بند ہیں۔وفاقی وزیرداخلہ شیخ رشید کاکہنا ہے کہ ٹی ایل پی کا فرانس کے سفیرکی ملک بدری کا مطالبہ منظور نہیں کرسکتے باقی مطالبات تسلیم کرلیے ہیں۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here