جاپان نے برطانیہ سے آنے والے غیر جاپانیو ں کے داخلے پر پابندی عائد کر دی

0
193

ٹوکیو(نمائندہ خصوصی):___جاپان کی صحت لیبر اور فلاحی وزیر کاتو کاتسُونوبُو نے سابق وزیراعظم شنزوابے کی سرکاری رہائش گا ہ پرایک پریس کانفرنس کی-پریس کانفرنس سے بات کرتے ہوئے کاتو کاتسُونوبُو نے کہا کہ حال ہی میں برطانیہ میں ایک نہایت ہی متعدی کورونا وائرس کی دریافت کے بعد حکومت جاپان نے برطانیہ سے آنے والوں پر پابندی لگادی ہے

تفصیلات کے مطابق جاپانی حکومت کا کہنا ہے کہ وہ، برطانیہ سے آنے والے مسافروں کے داخلے پر پابندیاں سخت کرے گی۔ یہ قدم اس وجہ سے اٹھایا جا رہا ہے کہ وہاں نئے کورونا وائرس کی ایک ایسی تبدیل شدہ شکل پھیل رہی ہے جس کے بارے میں باور کیا جاتا ہے کہ وہ انتہائی متعدی ہے۔چیف کابینہ سیکریٹری کاتو کاتسُونوبُو نے بدھ کے روز نامہ نگاروں کو بتایا کہ جاپان کے تقویت شدہ اقدامات جمعرات سے لاگو ہو جائیں گے۔جناب کاتو نے کہا کہ فی الحال جاپان، برطانیہ سے کسی نئے داخلے کی اجازت نہیں دے گا۔ انہوں نے کہا کہ برطانیہ کا زیادہ سے زیادہ سات دن کا کاروباری دورہ کرنے والے جاپانی اور غیر جاپانی رہائشیوں سے ایک بار پھر کہا جائے گا کہ گھر لوٹنے یا جاپان میں داخل ہونے پر وہ خود کو چودہ دن قرنطینہ میں رکھیں۔ فی الحال اس طرح کے مسافر، مخصوص شرائط پوری کرنے پر قرنطینہ سے مستثنیٰ ہیں۔جناب کاتو نے مزید کہا کہ برطانیہ سے واپس آنے والے جاپانی شہریوں کو ستائیس دسمبر سے کہا جائے گا کہ وہ ثبوت پیش کریں کہ برطانیہ چھوڑنے سے پہلے کے 72 گھنٹوں میں انکا ٹیسٹ کیا جا چکا ہے۔انہوں نے کہا کہ جاپان میں نئے کورونا وائرس انفیکشن کی روکتھام کے لیے حکومت سرگرمی سے سرحدی کنٹرول لاگو کرے گی۔دیگر ممالک میں ہونے والی پیشرفت کے حوالے سے جناب کاتو نے کہا کہ فیصلے لازماً ڈیٹا اور تجزیے کی بنیاد پر کیے جانے چاہئیں اور نشاندہی کی کہ برطانوی حکام نے اپنے تجزیات کے نتائج جاری کر دیے ہیں۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here