اغوا شدگان کی واپسی کے لیے یوکوتا خاندان کی امریکا سے معاونت کی اپیل

0
200

شمالی کوریا کے ہاتھوں اغوا شدہ ایک خاتون کے اہلِ خانہ نے ٹوکیو میں امریکی سفارت خانے کے اعلیٰ ترین عہدیدار سے ملاقات کر کے شمالی کوریا کے اغوا کردہ جاپانی شہریوں کی بازیابی میں معاونت کی اپیل کی ہے۔ مذکورہ خاتون، یوکوتا میگُومی، بحیرہ جاپان کے ساحل پر واقع نیگاتا شہر میں، سنہ 1977 میں ثانوی اسکول سے گھر جاتے ہوئے اغوا کر لی گئی تھیں۔ انکی والدہ یوکوتا ساکیے اور جوڑواں بھائیوں تاکُویا اور تیتسُویا نے منگل کے روز امریکا کے عبوری قائم مقام سفیر جوزف ینگ سے انکی سرکاری رہائشگاہ پر ملاقات کی۔ اطلاعات کے مطابق محترمہ میگُومی کے والد شیگیرُو کے جون میں انتقال پر امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ اور دیگر کی جانب سے ملنے والے تعزیتی مراسلات پر یوکوتا خاندان کی جانب سے اظہار تشکر کے لیے اس ملاقات کا اہتمام کیا گیا تھا۔ ملاقات بند کمرے میں ہوئی تاہم بعد از ملاقات، اس خاندان نے نامہ نگاروں سے اظہار خیال کیا۔ انہوں نے بتایا کہ ملاقات میں انہوں نے اغوا شدگان کی جلد از جلد واپسی کے لیے امریکی حکومت کے تعاون کی اپیل کی کیونکہ اغوا شدگان کے اہلِ خانہ تیزی سے عمر رسیدہ ہوتے جا رہے ہیں۔ محترمہ یوکوتا ساکیے نے بتایا کہ ملاقات نے اُن میں امید کی کرن جگائی اور یہ کہ وہ مختلف ممالک کی عوام کے تعاون سے اغوا شدگان کی واپسی کی اپیل کریں گی۔ انہوں نے مزید کہا کہ وہ چاہتی ہیں کہ جاپانی حکومت تمام اغوا شدگان کی واپسی کے لئے پوری کوشش کرے۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here