اپنے حلقے میں پاکستانیوں کو عزت کی نگاہ سے دیکھتی ہوں “کانگریس ویمن ایوٹ ڈی کلارک

0
157

کشمیری مسلمانوں کی آزادی ان کا ازلی حق ہے‘سٹیٹ ڈیپارٹمنٹ کردار ادا کرے‘پاکستانیوں کے مسائل کو میں بخوبی سمجھتی ہوں کورونا سے مرنے والوں کے لواحقین کے دکھ میں برابر کی شریک ہوں‘کانگریس ویمن ایوٹ ڈی کلارک

بروکلین‘ نیویارک (م ح سے)____لٹل پاکستان کونی آئی لینڈ پر واقع جامع مسجد مکی میں اس وقت عجیب صورتحال پیدا ہو گئی جب بروکلین سے 2007ء سےمسلمانوں کی حمایت یافتہ کانگریس ویمن ایوٹ ڈی کلارک اپنی انتخابی مہم کیلئے کمیونٹی کے سرکردہ افراد چوہدری اسلم ڈھلوں اور کریم وٹو کی معیت میں گزشتہ جمعتہ المبارک جامع مسجد مکی میں داخل ہوئیں تو جامع مسجد مکی کے امام وخطیب جو اس وقت جمعہ کا خطبہ دے رہے تھے کانگریس ویمن ایوٹ کلارک کی مسجد میں آمد پر سخت برانگیختہ ہو گئے یہاں تک کے قاری رشید نے ایوٹ کلارک کی مسجد میں موجودگی پر اس قدر ناراضی کا اظہار کیا کہ خطبہ جمعہ کے دوران ہی سپیکر پر اونچی آواز میں کہنا شروع کر دیا کہ اسے پیچھے ہی رکھو جس پر کانگریس ویمن بڑے محتاط انداز سے سرکتے سرکتے ان سرکردہ لیڈروں کی موجودگی میں ممبر سے منسلک مائیک پر پہنچ گئیں جہاں انہوں نے پاکستانی مسلمانوں کو اپنی حمایت کے حوالے سے خطاب کیا اور کشمیری مسلمانوں پر ہونے والے ظلم وستم پر اپنی آواز کانگریس میں دوبارہ اٹھانے کا وعدہ کیا-کانگریس کانگریس ویمن نے پاکستانی ودیگر کمیونٹی میں کورونا وائرس سے ہلاک ہونے والوں کے لواحقین سے دلی افسوس بھی کیا -ان کا کہنا تھا کہ ہماری کمیونٹی کو کورونا سے مقابلہ کرنے کیلئے اپنے ٹیسٹ کرانا ہو ں گے-انہوں نے کہا کہ وہ اپنے حلقے میں پاکستانیوں کو عزت کی نگاہ سے دیکھتی ہیں اور ان کے مسائل کو بخوبی سمجھتی ہیں ان کا کہنا تھا کہ وہ پہلی کانگریس ویمن ہیں جنہوں نے صدر ٹرمپ کی جانب سے مسلمانوں پر لگائے جانے والے مسلم بین کی مخالفت کی اوروہ اس پابندی کی مخالفت کرتی رہیں گی -ایوٹ کلارک کا کہنا تھا کہ آج امریکہ میں جاری ناانصافی کی وجہ سے لوگ سڑکوں پر آ گئے ہیں ان کا کہنا تھا کہ سٹیٹ ڈیپارٹمنٹ کی ذمہ داری ہے کہ وہ کشمیر کے نہتے مسلمانوں کی زندگی کی ضمانت دیں تاکہ کشمیری مسلمانوں کو انصاف اور آزادی میسر ہو-

ایوٹ ڈی کلارک نے کہا کہ آپ پاکستانیوں کی طرح میری والدین امریکہ میں بہتر زندگی کی تلاش میں آئے-ان کا کہنا تھا کہ امریکہ میں نسلی تعصب کی جو دیواریں کھڑی کی گئی تھیں اب وہ پاش پاش ہونے کا وقت آگیا ہے

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here